ماياوتی اور رابڑی ديوی کی طرح سياسی فلک پر چھانے کی جدجہد کر رہی ہيں منيشا بانگر۔

ماياوتی کو کاشی رام نے موقہ ديا تو انہوں نے اپنی قيادت ثابت کر کے دکھای۔ وه نہ صرف ہندوستان کے سب سے بڑے صوبہ کی کيی بار وزيرِاعلیٰ بنیں بلکہ اپنی پارٹی بسپا کو انہوں نے قومیٔ پارٹی کا درجہ دلانے ميں قاميابی حاصل کی۔ بہيں رابڑی ديوی کو حالات نے وزيرِاعلیٰ بنایا۔ ايک گھريلو بيوی کا کردار نبھانے والی رابڑی ديوی بڑی بڑی مشکلوں سے دو چار ہوتے ہؤے اپنی قيادت صابت کی۔ اور بہار ميں لگاتار سات سالوں تک وزيرِاعليٰ رہيں۔ قيادت صابت کربے کی سب سے مشکل راه اپنے بلبوتے پر جدجہد کر کے آگے بڑھنا ہؤتا ہے۔ پیپلس پارٹی آف انڈيا کی قومی…

ناگپور لؤکسبھا: بدلتے سميکرن کے بيچ پی پی آیٔ اميدوار نے دی ہے دستک

ناگپور لؤکسبھا چناؤ ميں اس بار بھاجپا اميدوار نتن گڈکری کے خلاف انوسوچت جاتيوں اور پسماندہ معاشره ميں نارازگی کو جہاں کانگريس بھنانے ميں لگی ہے وہيں پیپلس پارٹی آف انڈيا کی اميدوار منيشا بانگر کے رن ميں کودنے سے لڑایٔ کافی دلچسپ ہو گيی ہے۔ ۲۰۱۴ کے چناؤ کے برعکس اس بار ديگر پسمانده اور انوسوچت جاتیوں ميں گڈکری سے ہمدردی کافی ہد تک کم ہے۔ اسکا ہر ممکن فائدا کانگريس کے نانا پٹولے لينے کی کوشش کر رہے ہيں۔ جبکہ پیپلس پارٹی آف انڈيا نے تيز ترّار سماجی کارکن ڈاکٹر منيشا بانگر کو اتار کر کانگريس کی بےچينی بڑھا دی ہے۔ دوسری طرف آل…